کرنٹ لگنے سے 26 افراد کی ہلاکت پر پیسکو کو 1 کروڑ 30 لاکھ روپے جرمانہ

نیشنل الیکڑک پاور ریگولیٹری اتھارٹی ( نیپرا) نے کرنٹ لگنے سے 26 افراد کی ہلاکت پر پشاور الیکٹرک سپلائی کمپنی (پیسکو )کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے کمپنی کو ایک کروڑ 30 لاکھ روپے جرمانہ کر دیا۔

دنیا نیوز کے مطابق نیپرا کی جانب سے جاری اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ نیپرا نے جولائی سے دسمبر 2019ء کے دوران کرنٹ لگنے سے 26 افراد کی ہلاکت پر پیسکو پر ایک کروڑ 30 لاکھ روپے کا جرمانہ عائد کیا ہے۔ کرنٹ لگنے سے 26 افراد کی ہلاکت پر نیپرا نے تحقیقاتی کمیٹی تشکیل دی تھی اور کمیٹی نے اپنی رپورٹ میں 26 میں سے 14 اموات میں پیسکو کو قصور وار قرار دیا۔

اعلامیہ کے مطابق اتھارٹی نے نیپرا ایکٹ کے تحت پیسکو کو شوکاز نوٹس جاری کیا تھا اور پیسکو کو سماعت کا موقع بھی دیا گیا، پیسکو ضابطہ اخلاق اور حفاظتی معیارات کو برقرار رکھنے میں ناکام رہا جبکہ پیسکو بروقت اموات کی اطلاع اتھارٹی کو دینے میں بھی ناکام رہا،نیپرا نے پیسکو کو سوگوارخاندانوں کو معاوضہ ادا کرنے کی ہدایت بھی کی ہے۔