پاکستان میں خونی انقلاب کی باتیں کون کروا رہا ہے؟ میجر جنرل بابر افتخار نے حقائق بیان کردیے

 پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے سربراہ میجر جنرل بابر افتخار نے کہا ہے کہ پاکستان میں جب بھی مغربی مفادات کو ٹھیس پہنچتی ہے تو یہاں خونی انقلاب کی باتیں شرو ع ہوجاتی ہیں لیکن پاکستان کی قوم نے ان باتوں کو ایک خاص حد سے آگے نہیں جانے دیا۔

آئی ایس پی آر ہیڈ کوارٹرز میں پریس کانفرنس کے دوران ایک صحافی کے سوال کا جواب دیتے ہوئے ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ  پاکستان میں خونی انقلاب کی کوششیں نئی نہیں ہیں، پاکستان کے دشمن ہمیشہ سے یہ کرتے رہے ہیں، گزشتہ کچھ دہائیوں میں ان میں اضافہ کیا گیا ہے، ہماری آبادی، جیو گرافی، آرمی اور اسلامی مملالک ہمارا مقام ایسا ہے کہ اس کے نتائج آتے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ پاکستان میں مغربی مفادات کو جب بھی ٹھیس پہنچتی ہے تو اس کے نتائج آتے ہیں، پاکستانی قوم نے کبھی بھی انتشار کی کوششوں کو ایک حد سے آگے نہیں جانے دیا، گزشتہ دو دہائیوں کے دوران ہم بطور قوم بہت آگے آگئے ہیں، یہ تمام کوششیں جس بھی طرف سے ہورہی ہیں یہ کسی مقام پر نہیں پہنچیں گی۔