لاہور میں مردہ جانوروں کا گوشت فروخت کرنے والا گروہ پکڑا گیا؟ملزم یہ دھندہ کیسے کرتے تھے؟اہم انکشافات سامنے آگئے

وانکوٹ پولیس نے لاہور میں کئی سالوں سے مردہ جانوروں کا گوشت فروخت کرنے والے تین رکنی گینگ کو گرفتار کرلیا،ملزمان سے جعلی مہر اور دیگر سامان برآمد ہوا ہے۔

ایس ڈی پی او نواں کوٹ سرکل  عمر فاروق بلوچ کے مطابق ملزمان کی گرفتاری کے لئے ڈی آئی جی انویسٹی گیشن شارق جمال خان نے خصوصی ٹاسک سونپا تھا،جس پر انچارج انویسٹی گیشن نوانکوٹ سرکل قمر ساجد کی سربراہی میں پولیس کی خصوصی ٹیم تشکیل دی گئی جس نے  گینگ کےتین ملزمان کو گرفتارکرلیا ہے۔

گرفتار ملزمان میں گینگ کا سرغنہ فداالحق، خالد احمد اور ساتھی ماجدشامل ہیں جوکہ اپنے ساتھیوں کی مدد سے گائے، بھینسوں کو زہر آلود آٹے کا پیڑا کھلا دیتے اورچند گھنٹے بعد مویشوں کے مرنے پرمالک سے خود ہی جانور خرید کر ذیج کرکے گوشت فروخت کرتے تھے۔گرفتارملزمان کے قبضہ میں زیر استعمال گاڑی اورایک جعلی اسٹمپ بھی برآمد کر لی گئی ہے.ملزمان سے مزید تفتیش جاری ہے