مصباح کو فارغ کر کے غیر ملکی کوچ لانے کا فیصلہ ہو گیا، ممکنہ امیدواروں میں کون شامل ہے؟

 پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے نیوزی لینڈ میں قومی ٹیم کی انتہائی ناقص کارکردگی پر ہیڈ کوچ مصباح الحق کو فارغ کر کے غیر ملکی کوچ لانے کا فیصلہ کرلیا ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق دورہ نیوزی لینڈ کے دوران ٹی 20 اور ٹیسٹ سیریز میں شکست کے بعد پی سی بی نے ہیڈ کوچ مصباح الحق سے مزید خدمات نہ لینے کا فیصلہ کیا ہے اور جنوبی افریقہ کیخلاف ہوم سیریز بطور ہیڈ کوچ ان کی ممکنہ طور پر آخری سیریز ہو گی۔ نجی خبر رساں ادارے دنیا نیوز کے مطابق پی سی بی نے غیر ملکی کوچ لانے کا فیصلہ کیا ہے اور زمبابوے کے گرانٹ فلاور جبکہ جنوبی افریقہ کے گیری کرسٹن ممکنہ امیدواروں میں شامل ہیں۔ 

ذرائع کے مطابق قومی سکواڈ کی وطن واپسی پر بورڈ حکام کی جانب سے ناصرف مصباح الحق سے جواب طلبی ہو گی بلکہ بیٹنگ کوچ یونس خان اور باﺅلنگ کوچ وقار یونس سے بھی ناقص ترین کارکردگی پر بازپرس کی جائے گی جبکہ کرکٹ کمیٹی کے ایک اہم ممبر کو مستقبل میں غیرملکی کوچ کی تلاش کا ٹاسک بھی سونپا گیا ہے۔

نجی خبر رساں ادارے ایکسپریس نیوز کے مطابق اگلے ہفتے سلیم یوسف کی سربراہی میں پی سی بی کی کرکٹ کمیٹی کے اجلاس میں بھی مصباح سے خراب کارکردگی اور بعض کھلاڑیوں کی جانب سے درست رویہ روا نہ رکھے جانے کی شکایات کا بھی جائزہ لے کر سفارشات دی جائیں گی۔ 

واضح رہے کہ پاکستان کرکٹ ٹیم کی دورہ نیوزی لینڈ میں پاکستان کرکٹ ٹیم کی مختصر اور طویل فارمیٹ کی کرکٹ میں کارکردگی انتہائی ناقص رہی۔ ٹی 20 سیریز کے ابتدائی دو میچز ہارے اور تیسرے میچ میں جیت حاصل ہوئی اور یوں سیریز 1-2 سے نیوزی لینڈ کے نام رہی۔ 

بعد ازاں دونوں ٹیموں کے درمیان کھیلی جانے والی ٹیسٹ سیریز میں بھی نیوزی لینڈ نے وائٹ واش کیا۔ ماﺅنٹ منگنوئی میں کھیلے گئے پہلے ٹیسٹ میچ میں پاکستان کو 101 رنز کی شکست کا سامنا کرنا پڑا تو دوسرے ٹیسٹ میچ میں ایک اننگز اور 176 رنز کی شکست کیساتھ سیریز میں کلین سویپ بھی ہوا۔