اثاثہ جات کیس میں اہم پیشرفت ، خواجہ آصف کے 48 بے نامی اکاؤنٹس سامنے آگئے

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما خواجہ آصف کے خلاف آمدن سے زائد اثاثہ جات اورمنی لانڈرنگ انکوائری میں اہم پیشرفت ہوئی ہے۔ قومی احتساب بیورو (نیب) نے اُن کے 48 بے نامی بینک اکاؤنٹس کا سراغ لگانے کا دعوٰی کر دیا ہے۔

نجی ٹی وی ہم نیوز کے مطابق خواجہ آصف کے 48 بنک اکاؤنٹس سامنے آئے ہیں جس میں ایک ارب 45 کروڑ روپے کی خطیر رقم جمع ہوئی ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ تمام بنک اکاؤنٹس خواجہ آصف اور ان کے خاندان کے بے نامی اداروں کے نام پر کھلوائے گئے۔

نیب ذرائع کے مطابق لیگی رہنما خواجہ آصف اور ان کے خاندان کے اراکین کے اکاؤنٹس میں 22 کروڑ 30 لاکھ کی رقوم جمع ہوئیں۔ خواجہ آصف سے دوران تفتیش استفسار کیا جائے گا کہ بھاری رقوم کس مد میں ان کے اکاؤنٹس میں جمع ہوئیں؟ بے نامی اداروں کے اکاؤنٹس میں موجود اور اس کے تعلق کی بابت بھی دریافت کیا جائے گا۔

ذرائع کے مطابق خواجہ آصف سے ان کے بے نامی اداروں کے متعلق بھی روبرو بٹھا کر تفتیش کی جائے گی۔