کورونا وائرس حفاظتی لباس پہن کر ہسپتال اہلکار کی اپنی محبوبہ کو شادی کی انوکھی ترین پیشکش

اٹلی میں ایک ’میل نرس‘ نے کورونا وائرس سے بچاﺅ کا حفاظتی لباس پہن اپنی محبوبہ کو شادی کی انوکھی پیشکش کر ڈالی۔ انڈیا ٹائمز کے مطابق گیوزپے پنجنٹ نامی یہ نوجوان اٹلی کے شہر پوگلیا کے اوستونی ہسپتال میں ڈیوٹی کے فرائض سرانجام دے رہا تھا جہاں اس نے حفاظتی لباس پہن کر اپنی محبوبہ کو شادی کی پیشکش کی۔ اس نے اپنے لباس کی پشت پر ’کارمیلی، کیا تم مجھ سے شادی کرو گی؟‘ لکھوا رکھاتھا اور اس سوال کے نیچے’ہاں‘ یا ’نہیں‘ کے دو آپشن لکھ رکھے تھے۔

گیوزپے کی محبوبہ اس وقت ہسپتال میں موجود نہیں تھی بلکہ وہ اپنے گھر میں تھی۔ گیوزپے نے اپنی پشت پر لکھے اس سوال کی تصویر بنوائی اور فیس بک پر پوسٹ کر دی جہاں کمنٹس میں کارمیلی نے اسے ’ہاں‘ کہا۔ کارمیلی نے دل کے 7ایموجیز کے ساتھ YESSSSSSSلکھ کر گیوزپے کی پیشکش قبول کی۔ واضح رہے کہ گیوزپے خود بھی کورونا وائرس میں مبتلا رہ چکا ہے اور صحت مندی کے بعد ایک بار پھر کورونا وارڈ میں ڈیوٹی سرانجام دے رہا ہے۔