قائداعظم ٹرافی کے رواں سیزن میں سب سے زیادہ رنز کس نے بنائے؟ غیر معروف نوجوان کھلاڑی نے بڑے بڑے ناموں کو پیچھے چھوڑ دیا

 قائداعظم ٹرافی کے رواں سیزن میں سب سے زیادہ رنز بنانے والے کھلاڑی کانام آ گیا ہے اور کامران غلام قائداعظم ٹرافی کے ایک سیزن میں سب سے زیادہ رنز بنانے والے بلے باز بن گئے ہیں

تفصیلات کے مطابق خیبر پختونخوا کی نمائندگی کرنے والے کامران غلام نے قائداعظم ٹرافی کے رواں سیزن میں 1200 سے زائد رنز بنا لئے ہیں۔ نیشنل سٹیڈیم کراچی میں جاری خیبر پختونخوا اور سینٹرل پنجاب کے فائنل میں کامران غلام 80 رنز پر ناٹ آﺅٹ ہیں جبکہ اس سے قبل پہلی اننگز میں نصف سنچری سکور کی تھی وہ 76 رنز بنا کر پویلین لوٹے تھے۔

25 سالہ بیٹسمین کامران غلام کا یہ قائداعظم ٹرافی کا دوسرا سیزن ہے جنہوں نے رواں سیزن میں چار سنچریاں اور چھ نصف سنچریاں سکور کر رکھی ہیں۔ پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے آج ان کی نصف سنچری کی اننگز کی ویڈیو شیئر کی تو اس کے ساتھ انہیں ’ مسٹر ڈومیسٹک کرکٹر آف دی ائیر‘ کہہ کر مخاطب کیا ہے۔

کامران غلام قائداعظم ٹرافی کی تاریخ میں 84-1983ءکے سیزن کے بعد پہلے بیٹسمین بن گئے ہیں جنہوں نے 37 سال بعد 1200 سے زائد رنز سکور کئے ہیں۔ خیبر پختون خوا کے علاقے اپر دیر سے تعلق رکھنے والے 25 سالہ کامران غلام نے قائداعظم ٹرافی کے رواں سیزن میں پانچ  سنچریاں سکور کی ہیں اور اپنی شاندار بیٹنگ پرفارمنس کے باعث قائداعظم ٹرافی کی تاریخ کے زیادہ سکور کرنے والے کرکٹر بھی بن گئے ہیں۔

انہوں نے دوران سیزن سکور ریکارڈ میں قومی ٹیسٹ کرکٹ کے کئی بڑے ناموں کو بھی پیچھے چھوڑ دیا، جن میں باسط علی، قاسم عمر، اسد شفیق اور یونس خان بھی شامل ہیں۔ باسط علی نے 90-1989ءکی قائداعظم ٹرافی میں 1,046 رنز سکور کئے تھے جبکہ قاسم عمر نے 83-1982ءکے سیزن میں 1,078 رنز بنائے تھے۔

قومی کرکٹ ٹیم کے موجودہ بیٹنگ کوچ اور مایہ ناز بیٹسمین یونس خان نے قائداعظم ٹرافی کے 1999 اور 2000 کے سیزن میں 1,102 رنز سکور کئے تھے۔ پاکستان ٹیسٹ کرکٹ کے ایک اور سٹائلش بیٹسمین اسد شفیق نے 10-2009ءکے سیزن میں 1,104 رنز بنائے تھے۔

کامران غلام نے آج اپنی بیٹنگ کے دوران قائداعظم ٹرافی کی تاریخ میں سب سے زیادہ رنز بنانے والے سعادت علی کو پیچھے چھوڑ دیا ہے جنہوں نے 1,217 رنز کا ریکارڈ 84-1983ءکے سیزن میں بنایا تھا۔