بہاولپور ریلی میں مریم نواز کی وزیراعظم پرتنقید، سخت سردی میں ماحول گرما دیا

مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے کہا ہے کہ مولانا فضل الرحمان صاحب اگر آپ حکم دیں تو ریلی میں شریک عوام کے سمندر کا رخ اسلام آباد کی طرف موڑ دوں تو سوچو پھر کیا ہوگا؟ جعلی وزیراعظم کو کہیں بھی منہ چھپانے کی جگہ نہیں ملی گے۔ 

مریم نواز نے نے بہاولپور میں ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مہنگائی نے عوام کی کمر توڑ دی ہے، لوگ مہنگائی سے تنگ آچکےہیں اس لیے چاہتی ہوں جلد سے جلد نالائق اور نااہل وزیراعظم کو گھر بھیجیں جو ڈھائی سال بعد آکر کہتاہے کہ تیاری کے بغیر حکومت میں نہیں آنا چاہیے، آج ہی ہاتھ کھڑے کر گیا۔ انہوں نے ریلی کے شرکاء سے سوال کیا کہ ہمیں جعلی اسمبلی میں بیٹھے رہنا چاہیے یا استعفے دینے چاہئیں؟ اور جس دن پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) نے استعفے دے دیئے اس دن جعلی حکومت کا بسترگول ہوجائے گا۔

انہوں نے کہا کہ بہاولپور کے عوام نے فیصلہ سنا دیا ہے کہ حکومت کے دن گنے جاچکے ہیں،  یہ تبدیلی کانعرہ لگاتےتھے، کیا مہنگائی، بیروزگاری، کشمیر فروشی کو تبدیلی کہتےہیں؟ کیا غریب کا چولہا بجھا دینے کو تبدیلی کہتے ہیں؟ کیاایل این جی پر 122 ارب کےڈاکےکوتبدیلی کہتےہیں؟  آج چینی 120 روپےکلوہوچکی ہے،مرغی تودورماش کی دال 250روپےکلوہوچکی ہے، بجلی،گیس کےنرخوں میں روزانہ اضافہ ہورہاہے۔ ان کا کہنا تھا کہ آئی ایم ایف نےکہابجلی کی قیمتیں 25 فیصدبڑھاناہوں گی، ن لیگ دورمیں آٹا 35آج 90روپےکلوہے، عوام روٹی پوری کریں یابجلی،گیس کےبل دیں؟کیامہنگی ترین بجلی،گیس کوتبدیلی کہتےہیں؟ بنی گالہ کےمحل کوریگولرائز کرانے کو تبدیلی کہتےہیں؟ اسلام آبادمیں 22سالہ نوجوان کوپولیس نےقتل کردیا، نوجوان کےقتل پرجعلی وزیراعظم نےآوازنہیں اٹھائی۔

Leave a Reply