دنیا کی تاریخ کے معروف ترین نجومی نوسٹرڈیمس کی 2021ءکے بارے میں تہلکہ خیز پیشنگوئیاں سامنے آگئیں

پیرس(مانیٹرنگ ڈیسک) نوسٹراڈیمس 16ویں صدی عیسوی کا فرانسیسی ماہر علم نجوم، فزیشن اور کاہن تھا جس نے آئندہ صدیوں کے لیے پیش گوئیاں کر رکھی ہیں اور اب تک اس کی کئی پیش گوئیاں درست ثابت ہو چکی ہیں۔ اب2021ءکے لیے بھی نوسٹراڈیمس کی کچھ پیش گوئیاں سامنے آ گئی ہیں جن میں انہوں نے بتارکھا ہے کہ 2021ءمیں فوجیوں کے دماغوں میں ایک ’چِپ‘ (Chip)نصب کی جائے گی۔ ایک خوفناک شمسی طوفان آئے گا جس سے زمین کا کمیونی کیشن سسٹم تباہ ہو کر رہ جائے گا۔ اس طوفان کی وجہ سے بڑے پیمانے پر ہجرت ہو گی اور جنگیں ہوں گی۔اس کے علاوہ انہوں نے ایک خوفناک قحط کی پیش گوئی بھی کر رکھی ہے جس سے2021ءمیں انسانیت کو دوچار ہونا پڑے گا

نوسٹراڈیمس کی پیش گوئیوں کے مطابق 2021ءمیں امریکی ریاست کیلیفورنیا میں ایک بہت بڑا زلزلہ آئے گا جبکہ روس میں کو ’زومبی ایپوکلپس‘ کی مصیبت سے نمٹنا پڑے گا۔ نوسٹراڈیمس نے دنیا کے خاتمے کے متعلق جو 6سب سے بڑی پیش گوئیاں کر رکھی ہیں ان میں سے ایک یہ بھی ہے کہ ایک ایسا خوفناک حیاتیاتی ہتھیار تیار کیا جائے گا جس سے وائرس پھیلے گا۔ یہ وائرس انسانوں کو ’زومبی‘ بنا ڈالے گا اور یوں دنیا سے انسان معدوم ہو جائے گا۔

واضح رہے کہ نوسٹراڈیمس نے ’گریٹ فائر آف لندن‘ ، ایڈولف ہٹلر کے اقتدار میں آنے، دوسری جنگ عظیم کی تباہ کاری، ایٹم بم کی ایجاد اور نائن الیون حملوں جیسی پیش گوئیاں کی تھیں جو من و عن درست ثابت ہوئیں۔ یہی نہیں، نوسٹراڈیمس نے امریکی صدر جان ایف کینیڈی کے بارے میں کئی صدیاں پہلے بتا دیا تھا کہ انہیں قتل کیا جائے گا۔

Leave a Reply